ناروے کی امیگریشن سے متعلق اہم سوالات

ناروے میں شادی اور فیملی امیگریشن سے متعلق بعض ایسےاہم سوالات ہیں جوکہ اکثرپوچھے جاتے ہیں. اس آرٹیکل میں‌ہم انہی سوالوں کا جواب دے رہے ہیں. امید ہے کہ وزیٹرز کو یہ سلسلہ پسند آئے گا.
س: اگر میں نے ناروے میں شادی کرنی ہو تو پھر کس طرح درخواست دینا ہو گی؟
ج: اگر آپ کا مقصد ناروے میں شادی کر کے قیام پذیر ہونے کا ہو تو پھر آپ شادی کیلئے مخصوص چھ ماہ کے اقامتی پرمٹ کیلئے درخواست دے سکتے ہیں۔ اقامتی پرمٹ کیلئے درخواست آپ کو اپنے ملک میں موجود نارویجن سفارتخانہ یا پھر اس ملک سے دینی ہو گی جس میں آپ گزشتہ چھ ماہ سے اقامتی پرمٹ کے ساتھ مقیم ہیں۔ اگر آپ کا مقصد اپنےساتھی کو ملنا اور مل کر واپس لوٹ جانا ہو تو پھر آپ 90 دن کیلئے کارآمد ملاقاتی ویزا کیلئے درخواست دے سکتے ہیں۔
س: کیا فیملی امیگریشن منظور ہونے سے پہلے میں ناروے جا سکتا/ سکتی ہوں؟
ج: عام طور پر فیملی امیگریشن منظور ہونے سے پہلے آپ ناروے نہیں جا سکتے۔ تاہم بعض صورتوں میں آپ ناروے میں داخل ہو کر یہاں سے درخواست دے سکتے ہیں۔ ایسی صورتوں کی مثالیں مدرجہ ذیل ہیں۔
* اگر آپ کا شریک حیات ناروے یا کسی نارڈک ملک کا شہری ہو اور ناروے میں مقیم ہو یا یہاں مقیم ہونے کا ارادہ رکھتا ہو۔
* اگر آپ کے شریک حیات کے پاس آبادکاری پرمٹ ہو یا ایسا پرمٹ ہو جو آبادکاری پرمٹ کی بنیاد بن سکتا ہو۔
* آپ کے اپنے شوہر/ بیوی کے ساتھ مشترکہ بچے جو نارویجن شہری نہ ہوں‘ وہ بھی ناروے آ کر یہاں سے درخواست دے سکتے ہیں۔ یہی اصول آپ کے ان بچوں کیلئے بھی ہے جو سابقہ شوہر/ بیوی سے ہوں اور آپ بلا شرکت غیرے یا دوسرے فریق کے ساتھ مل کر بچوں کے سرپرستانہ حقوق رکھتے ہوں اور دوسرا فریق بچوں کے ناروے میں آباد ہونے پر رضامند ہو۔
اگر آپ پر ویزا حاصل کرنے کی پابندی ہے تو قریبی نارویجن سفارتخانہ سے رابطہ کر کے اپنے شوہر/ بیوی کے پاس آنے کیلئے محدود ویزا برائے داخلہ کی درخواست دیں۔ یہ ویزا صرف بعض مخصوص کیسوں میں دیا جاتا ہے اور درخواست دہندگان کے ایک گروپ تک محدود ہے۔ کیس کا فیصلہ ایمبیسی کرتی ہے تاہم درخواست مسترد ہونے کی صورت میں آپ UDI سے اپیل کر سکتے ہیں۔
س: کیا جتنا عرصہ میں فیملی امیگریشن کا جواب آنے کا انتظار کر رہا ہوں‘ اس کے دوران مجھے عارضی ورک پرمٹ مل سکتا ہے؟
ج: اگر آپ ان لوگوں میں سے ہیں جنہیں ناروے جا کر فیملی امیگریشن کی درخواست دینے کی اجازت مل جاتی ہے تو آپ عارضی ورک پرمٹ کی درخواست دے سکتے ہیں۔
س: کیا فیملی امیگریشن کی درخواست کے ساتھ فیس دینا پڑتی ہے؟
ج: پولیس/ ایمبیسی کو درخواست دیتے ہوئے ساتھ فیس ادا کرنا ہوتی ہے۔ 18 سال سے کم عمر کے بچوں کو فیس نہیں دینا پڑتی۔ فیس نقد یا کارڈ کے ذریعے ادا کی جا سکتی ہے۔ آپ یوں بھی کر سکتے ہیں کہ پیشگی فیس ادا کر کے (اکاؤنٹ میں رقم بھیج کر) اس کی رسید درخواست کے ساتھ لگا دیں خواہ آپ بذریعہ ڈاک درخواست بھیج رہے ہوں یا خود آ کر درخواست دے رہے ہوں۔ پولیس/ سفارتخانے سے اکاؤنٹ نمبر معلوم کیا جا سکتا ہے۔
س: اگر میری درخواست نامنظور ہو جائے تو کیا میں اپیل کر سکتا ہوں؟
ج: جی ہاں! اگر آپ اپیل کرتے ہیں تو UDI اپیل پر کارروائی کرے گا اور اگر UDI اپنے سابقہ فیصلے کو نہیں بدلتا تو غیر ملکیوں کی اپیلوں کی سماعت کرنے والا بورڈ (UNE) اپیل پر کارروائی کرے گا۔ اپیل پر کارروائی کیلئے کوئی فیس نہیں دینا پڑتی۔
س: مجھے اپنے اجازت نامہ برائے اقامت وروزگار کی تجدید کرانی پڑے گی جو مجھے فیملی امیگریشن کی بنیاد پر ملا ہے؟
ج: اصولی طور پر یہ اجازت نامہ ایک وقت میں ایک ہی سال کیلئے دیا جاتا ہے۔ اگر اجازت نامہ قابل تجدید ہے تو اس کی تجدید کیلئے درخواست دینا پڑتی ہے۔ اجازت نامے کی میعاد ختم ہونے سے پہلے تجدید کی درخواست دینا ضروری ہے۔ تجدید کرواتے وقت فیس دینا پڑتی ہے۔ (18سال سے کم عمر کے بچوں کیلئے کوئی فیس نہیں ہے) تین سال بعد آپ اقامتی پرمٹ کی درخواست دے سکتے ہیں۔

آپ یہ صفحات بھی دیکھنا پسند کریں گے ۔ ۔ ۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Translate »
error: Content is protected !!
%d bloggers like this: